پاک کی ناپاک حرکت: ایل اوسی پر جنگ بندی کی خلاف ورزی میں دو جوان شہید

بھارت

نئی دہلی/ جموں، پاکستان نے آج ایک بار پھر جنگ بندی کی خلاف ورزی کرتے ہوئے جموں و کشمیر کے ضلع پونچھ میں کنٹرول لائن کے نزدیک فاروڈ چوکیوں کو نشانہ بنا کر فائرنگ کی جس میں فوج کا ایک نائب صوبیدار اور سرحدی حفاظتی دستہ (بی ایس ایف) کےایک جوان شہید ہو گئے، اور ایک زخمی ہو گیا۔دونوں جوانوں کی لاشيں خون سے لت پت حالت میں ملی ہیں۔
فوجی ذرائع نے بتایا کہ پاکستانی فوج نے جنگ بندی کی خلاف ورزی کرکے کرشنا وادی سیکٹر میں فارورڈ چوکیوں کو نشانہ بنایا۔ پاکستانی چوکیوں سے راکٹ اور مارٹر سے کے جی سیکٹر میں بی ایس ایف کی چوکیوں پر بھی فائرنگ کی گئی۔ اس میں فوج کے نائب صوبیدار پرم جیت سنگھ، بی ایس ایف کے ہیڈ کانسٹیبل پریم ساگر شہید ہوگئے اور جوان راجندر سنگھ زخمی ہو گیا۔ ہندوستانی فوج کی طرف سے اس کا کرارا جواب دیا گیا ۔ آخری خبر ملنے تک فائرنگ جاری تھی۔
فوج کی شمالی کمان نے ایک بیان جاری کرکے کہا ہے کہ فائرنگ میں شہید ہونے والے دونوں جوان گشت کر نے کے لئے گئے تھے اور ان کی لاشیں مسخ شدہ حالت میں پائی گئی ہيں۔ فوج نے خبردار کیا ہے کہ پاکستانی فوج کی اس بزدلانہ حرکت کا منھ توڑ جواب دیا جائے گا۔
پاکستان کی جانب سے گزشتہ ماہ بھی سات بار جنگ بندی کی خلاف ورزی کی گئی تھی۔ ہندوستانی بحریہ کے سابق افسر كلبھوشن جادھو کے معاملے پر دونوں ممالک کے درمیان پہلے ہی کشیدگی بنی ہوئيچ ہے۔ پاکستان کی ایک فوجی عدالت نے گزشتہ ماہ مسٹر جادھو کو سزائے موت دی ہے۔

Similar Posts

Share it
Top