کشمیر میں ایل او سی پر جنگ بندی کی 3 بڑی کوششیں ناکام، 7 درانداز اور ایک فوجی اہلکار ہلاک

بھارت

کشمیر میں ایل او سی پر جنگ بندی کی 3 بڑی کوششیں ناکام، 7 درانداز اور ایک فوجی اہلکار ہلاک

سری نگر ،فوج نے شمالی کشمیر میں لائن آف کنٹرول (ایل او سی) پر گذشتہ 24 گھنٹوں کے دوران پاکستان زیر قبضہ کشمیر سے دراندازی کی تین بڑی کوششوں کو ناکام بناتے ہوئے 7 جنگجوؤں کو ہلاک کیا ہے۔ تاہم دراندازوں کے ساتھ گولہ باری کے تبادلے میں ایک فوجی اہلکار ہلاک جبکہ دو دیگر زخمی ہوگئے ہیں۔
سرکاری ذرائع نے بتایا کہ دراندازوں کے خلاف تین مختلف مقامات پر آپریشن جاری ہے۔ انہوں نے بتایا 'ایل او سی کی حفاظت پر مامور فوجیوں نے جمعرات کی علی الصبح نوگام سیکٹر میں پاکستان زیر قبضہ کشمیر سے جنگجوؤں کے ایک گروپ کو اندھیرے کا فائدہ اٹھاتے ہوئے بھارتی علاقہ میں داخل ہوتے ہوئے دیکھا'۔
تاہم جب دراندازی کے مرتکب جنگجوؤں کو للکارا گیا اور خودسپردگی اختیار کرنے کے لئے کہا گیا تو انہوں نے ایسا کرنے کے بجائے فوجیوں پر اندھا دھند فائرنگ شروع کی۔
سرکاری ذرائع نے بتایا 'فوجیوں نے جوابی فائرنگ کی جس کے بعد طرفین کے مابین باضابطہ طور پر جھڑپ کا آغاز ہوا، جس میں 3 جنگجوؤں کو ہلاک کیا گیا'۔ انہوں نے بتایا کہ دراندازوں کی فائرنگ کی وجہ سے ایک فوجی اہلکار جاں بحق ہوا ہے۔
ذرائع نے بتایا کہ آخری اطلاعات ملنے تک آپریشن جاری تھا۔ ایسی ہی ایک کوشش کے تحت قریب چھ جنگجوؤں نے جمعرات کی صبح اوڑی سیکٹر میں سرحد کے اس پار داخل ہونے کی کوشش کی ہے۔
تاہم جب ایل او سی پر تعینات فوجیوں نے انہیں سرحد کے اس پار داخل ہونے کی کوشش کرتے ہوئے دیکھا اور انہیں خودسپردگی اختیار کرنے کی پیشکش کی تو انہوں نے ایسا کرنے کے بجائے اپنی بندوقوں کے دھانے کھول دیے۔
سرکاری ذرائع نے بتایا کہ فوجیوں نے جوابی فائرنگ کی جس کے بعد طرفین کے مابین گولہ باری کا تبادلہ شروع ہوا جس میں ایک جنگجو کو ہلاک کیا گیا۔ انہوں نے بتایا کہ باقی جنگجوؤں نے اندھیرے کا فائدہ اٹھاتے ہوئے فرار ہونے کی کوشش کی۔
انہوں نے بتایا 'علاقہ میں سیکورٹی فورسز کی اضافی کمک بھیج کر مژھل سیکٹر کے سرداری نڈ جنگلات میں تلاشی آپریشن شروع کیا گیا'۔ ذرائع نے بتایا 'سیکورٹی فورسز کا بدھ کو دوپہر کے وقت جنگجوؤں سے آمنا سامنا ہوا اور طرفین کے مابین گولہ باری کے تبادلے میں مزید دو جنگجوؤں کو ہلاک کیا گیا'۔
ایک اور جنگجو کی لاش بعدازاں گذشتہ ایک نالہ میں پڑی دیکھی گئی۔ انہوں نے بتایا کہ آخری اطلاعات ملنے تک مژھل میں بھی جنگجو مخالف آپریشن جاری تھا۔ گزشتہ ماہ کی 27 تاریخ کو فوج نے ایسی ہی ایک کاروائی میں بارہمولہ کے رامپور سیکٹر میں 6 جنگجوؤں کو ہلاک کیا تھا۔ اس سے قبل فوج نے 26 مئی کو اوڑی سیکٹر میں ایل او سی پر پاکستانی باڈر ایکشن ٹیم سے منسلک دو اہلکاروں کو ہلاک کرنے کا دعویٰ کیا تھا۔
فوج نے مذکورہ کاروائی کی تفصیلات فراہم کرتے ہوئے کہا تھا کہ بیٹ سے منسلک دو اہلکاروں کو اُس وقت ہلاک کیا گیا جب وہ بھارتی فوج کی ایک گشتی پارٹی پر حملے کے ارادے سے بھارتی حدود میں داخل ہوگئے تھے۔ 21 مئی کو شمالی ضلع کپواڑہ کے نوگام سیکٹر میں جنگجوؤں اور سیکورٹی فورسز کے مابین ہونے والی ایک خونریز جھڑپ میں 4 جنگجو اور 3 فوجی اہلکار ہلاک ہوگئے تھے۔

Similar Posts

Share it
Top